ڈیرہ اسماعیل خان : بلدیاتی ایکٹ 2019 منظور کر لیا گیا 123

ڈیرہ اسماعیل خان : بلدیاتی ایکٹ 2019 منظور کر لیا گیا

ڈیرہ اسماعیل خان : بلدیاتی ایکٹ 2019 منظور کر لیا گیا
نئے بلدیاتی نظام میں اسسٹنٹ کمشنر اور ٹی ایم او تحصیل ناظم(چیئرمین) کے ماتحت ہوں گے ، اسسٹنٹ کمشنر سوشل سروسز ایڈمنسٹریشن جبکہ ٹی ایم او میونسپل سروسز میں اداروں کی رپورٹ تحصیل ناظم کو پیش کریں گے۔
تحصیل ناظم تحصیل لوکل گورنمنٹ کے سربراہ جبکہ ویلج ناظم تحصیل کونسل کے ممبر ہوں گے۔
ویلج کونسل کے ممبران کی تعداد 6 یا 7ہوگی اور جن میں 2 جنرل جبکہ 1 خاتون،یوتھ،کسان اور اقلیتی(جہاں ہو) ممبر ہو گا جبکہ
جنرل کونسلرز میں زیادہ ووٹ لینے والا ویلج ناظم بھی ہو گا اورتحصیل کونسل کا ممبر بھی۔
تناسب کے حساب سے ویلج کونسل سے زیادہ ووٹ لینے والی خواتین مخصوص نشست پر تحصیل ممبر منتخب ہوں گی۔
تحصیل لوکل گورنمنٹ کا ناظم پارٹی ٹکٹ پر الیکشن میں حصہ لے گا جبکہ ویلج کونسل کے الیکشن غیر جماعتی بنیادوں پر ہوں گے۔۔
پرائمری اینڈ سیکنڈری ایجوکیسن،محکمہ صحت(بی ایچ یوز،آر ایچ سیز اور تحصیل ہیڈ کوآٹرز)،
سوشل ویلفیئر،سپورٹس،کلچر،یوتھ افیئرز،محکمہ زراعت،محکمہ بہبود آبادی،میونسپل سروسز، واٹر سپلائی اینڈ سینینٹیشن کمپنیز،دیہی ترقی،ٹی ایم ایز،پبلک ہیلتھ،پلاننگ،فنانس،ہیومن ریسورس اور دیگر محکمہ جات براہ راست تحصیل ناظم کے ماتحت ہوں گے
جن میں ملازمین کے ساتھ ای اینڈ رولز کے تحت تحصیل ناظم کو کاروائی کرنے کا اختیار حاصل ہو گا۔
ویلج کونسل کی کم ازکم آبادی 5ہزار سے لے کر زیادہ سے زیادہ 15 ہزار تک ہو گی۔
نئے بلدیاتی بل کے مطابق مقامی حکومتوں کی مدت چار سال ہو گی
شہروں میں میونسپل اور محلہ کونسل اور دیہات میں تحصیل اور ویلیج کونسل ہوگی
نئے نظام کے تحت ویلج کونسل اور شہروں میں محلہ کونسل کا انتخاب غیر جماعتی بنیادوں پر ہوگا
نئے بلدیاتی میں تحصیل اور میونسپل سطح پر انتخاب جماعتی بنیادوں پر ہوگا
ویلج کونسل اور محلہ کونسل میں زیادہ ووٹ لینے والاچیئرمین ہوگا
بلدیاتی اداروں میں ایک سال کے اندر انتخابات کرائے جائیں گے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں