الیکشن کمیشن: پارٹی فنڈنگ کی چھان بین،ن لیگ اور پیپلزپارٹی نے جواب جمع کرادیا 49

الیکشن کمیشن: پارٹی فنڈنگ کی چھان بین،ن لیگ اور پیپلزپارٹی نے جواب جمع کرادیا

اسلام آباد: (اعتدال نیوز) الیکشن کمیشن کی سکروٹنی کمیٹی نے 7 نکاتی سوالنامہ پر جواب طلب کیا تھا۔ پیپلز پارٹی کی جانب سے جمع کرائے گئے جواب میں کہا گیا ہے کہ امریکا میں ہماری کوئی کمپنی نہیں ہے۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کی پارٹی فنڈنگ کی تحقیقات کے لیے الیکشن کمیشن سکروٹنی کمیٹی کا اجلاس ختم ہو گیا ہے۔ پیپلز پارٹی نے سکروٹنی کمیٹی کے سوالنامہ پر جواب جمع کرا دیا ہے۔

پیپلز پارٹی کی جانب سے جمع کرائے گئے جواب میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ امریکا میں ہماری کمپنی نہیں ہے۔ آئندہ اجلاس میں سکروٹنی کمیٹی پیپلز پارٹی کے جواب اور تفصیلات کا جائزہ لے گی۔ سکروٹنی کمیٹی نے پیپلز پارٹی کے نمائندوں کو 3 دسمبر کو دوبارہ طلب کر لیا ہے۔

دوسری جانب ن لیگ نے بیرون ملک کمپنیوں کی ملکیت کا الزام مسترد کرتے ہوئے پارٹی فنڈنگ کیس میں فنڈز فراہم کرنے والے افراد کی تفصیلات دینے کیلئے مہلت مانگ لی ہے۔

مسلم لیگ ن کی جانب سے محسن شاہ نواز رانجھا اور وکیل جہانگیر جدون الیکشن کمیشن میں پیش ہوئے۔ ن لیگ نے موقف اختیار کیا کہ ان کی امریکا میں کوئی کمپنی رجسٹرڈ نہیں تاہم برطانیہ میں مبینہ کمپنی سے متعلق کوئی جواب نہیں دیا۔

ن لیگ کے رہنماؤں نے کہا کہ ملک میں موجود تمام پارٹی اکاؤنٹس پہلے ہی الیکشن کمیشن کے سامنے پیش کئے جا چکے ہیں۔ چندہ دینے والے افراد کے شناختی کارڈ نمبرز جمع کرانے کیلئے وقت چاہیے۔

سماعت کے بعد میڈیا سے گفتگو درخواست گزار فرخ حبیب نے کہا کہ ن لیگ ایک صفحے کا جواب جمع کروا کر راہ فرار اختیار کر رہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں