3

بظاہرعلامات جنہیں دیکھ کر آپ ذیابیطس کی نشاندہی کرسکتے ہیں

ذیابیطس ایک بہت ہی عام بیماری ہے لیکن بہت سے لوگوں ٹیسٹ کرانے سے پہلے تک یہ احساس ہی نہیں ہوتا کہ وہ اس بیماری سے متاثر ہو چکے ہیں۔ اس مضمون میں ہم ان علامات کا ذکر کریں گے جو کہ ذہابیطس کی نشاندہی کرسکتی ہیں۔

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) کے مطابق دنیا بھر میں تقریباً 422 ملین لوگ ذیابیطس میں مبتلا ہیں اور ان کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے۔ ذیابیطس دنیا میں موت کی سب سے بڑی وجوہات میں سے ایک ہے۔ ان میں سے زیادہ تر اموات کم اور درمیانی آمدنی والے ممالک میں ریکارڈ کی گئی ہیں۔

تاہم ذہن نشین رہے کہ ذیابیطس کی روک تھا بنیادی طور پر دو طریقوں سے کی جاسکتی ہے۔ نمبر ایک: 30 منٹ کی درمیانی شدت کی حامل جسمانی سرگرمی اور نمبر دو: صحت بخش خوراک جو آپ کو ٹائپ 2 ذیابیطس ہونے کے خطرے کو کم کر سکتی ہے۔

علامات:

’ذیابیطس‘ کی اصطلاح یونانی طبیب ایریٹیئس (81-133 عیسوی) کی جانب سے وضع کی گئی تھی جس کا لفظی مطلب ہے ’بہنا‘۔ قدیم زمانے میں ڈاکٹرز پیشاب کو چکھ کر ذیابیطس کا ٹیسٹ کرتے تھے۔ اگر مٹھاس موجود ہوتی تو مطلب مریض کو ذیابیطس ہے۔ تاہم مطالعات اور معلومات کی ترقی کی بدولت اب ہم کچھ ایسی علامات کا مشاہدہ کر سکتے ہیں جو بیماری کا فوری پتہ دے سکتی ہیں۔

1) پیشاب زیادہ آنا

2) پیاس زیادہ لگنا

3) متلی

4) بھوک میں اضافہ

5) خشک جِلد

6) اُلجھن یا چڑچڑاپن اور بعد کے مراحل میں غنودگی اور ہوش وحواس کا بتدریج زائل ہونا

7) تھکاوٹ

8) وزن میں کمی

9) زخموں کو بھرنے میں زیادہ وقت لگنا

10) شرمگاہ کی جگہ پر خارش یا خراش پڑنا





Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں