3

جنوبی وزیرستان کے گھر میں ہونے والا دھماکا ڈرون حملہ تھا، رکن اسمبلی کا دعویٰ

خیبرپختونخوا اسمبلی کے رکن آصف محسود نے جنوبی وزیرستان کے ایک گھر میں ہونے والے دھماکے کو ڈرون حملہ قرار دیا ہے، اس واقعے میں ماں باپ اور تین بچے جاں بحق ہوگئے۔

اسمبلی اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے آصف محسود نے دعویٰ کیا کہ جنوبی وزیرستان کے گاؤں تنگی بدزوئی میں ہونے والے ڈرون حملے میں 80 سالہ بزرگ، ان کی اہلیہ اور تین بجے جاں بحق ہوئے ہیں۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ واقعے کی تحقیقات کے لیے پارلیمانی کمیٹی تشکیل دی جائے اور اس میں ملوث عناصر کے خلاف کارروائی کی جائے۔

مزید پڑھیں: جنوبی وزیرستان؛ گھر میں دھماکے سے خواتین سمیت 5 افراد جاں بحق

اُدھر سوشل میڈیا پر یہ بھی دعویٰ کیا  جارہا ہے کہ مذکورہ فیملی ایک روز قبل ہی مردان سے جنوبی وزیرستان منتقل ہوئی تھی۔





Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں