1

حماس پر حملے میں اسرائیلی فوج نے اپنے ہی 4 یرغمالیوں کو ہلاک کردیا

حماس نے 7 اکتوبر کو اسرائیل پر حملہ کرکے 250 سے زائد افراد کو یرغمال بنالیا تھا

حماس نے 7 اکتوبر کو اسرائیل پر حملہ کرکے 250 سے زائد افراد کو یرغمال بنالیا تھا

تل ابیب:حماس کے ٹھکانوں کو تباہ کرنے کی کوشش میں اسرائیلی فوج نے اپنے 4 یرغمالیوں کو بھی موت کے گھاٹ اتار دیا۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق اسرائیلی فوج نے شہر خان یونس میں ہلاک ہونے والے یرغمالیوں کی شناخت 79 سالہ چیم پیری، 80 سالہ یورام میٹ زگر، 85 سالہ امیرام کوپر اور 51 سالہ نداپوپل ویل کے نام سے ظاہر کی ہے۔

ان چاروں میں سے نداپوپل ویل کی ہلاکت کی خبر حماس کی جانب سے جاری کی گئی ایک ویڈیو میں دی گئی تھی۔ جس میں کہا گیا تھا کہ اسرائیلی بمباری سے زخمی ہونے والا پوپل ویل زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا۔

تاہم گزشتہ برس دسمبر میں حماس کی طرف سے جاری کی گئی ایک اور ویڈیو میں باقی 3 یرغمالیوں کو زندہ دکھایا تھا جو حماس کے خلاف کارروائی کے دوران اپنی ہی فوج کی بمباری میں  ہلاک ہوگئے تھے۔

اسرائیلی فوج نے ہلاک ہونے والے اہلکاروں کے اہل خانہ کو باضابطہ طور پر اطلاع بھی دیدی۔

یاد رہے کہ حماس نے 7 اکتوبر کو اسرائیل پر حملہ کیا تھا اور اس کے 250 سے زائد فوجیوں اور شہریوں کو یرغمال بناکر غزہ لے آئے تھے۔ جن میں سے آج 4 یرغمالی اپنی ہی فوج کی بمباری میں مارے گئے۔

یہ پہلی بار نہیں جب اسرائیلی فوج کی بمباری میں ان کے اپنے ہی ملک کے شہری جو اس وقت حماس کے قبضے میں ہیں، مارے گئے ہوں۔ اب تک درجنوں یرغمالی اسی طرح ہلاک ہوچکے ہیں۔





Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں